منرلز جیسے فاسفورس اور کیلشیم جبکہ وٹامنز اے اور سی شامل ہوتے ہیں

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)اس پھل کی زیادہ پیداوار چائنہ میں ہوتی ہے جبکہ اسے چائنیز یا جاپانی پھل کے نام سے بھی جانا جاتا ہے۔ اس میں منرلز جیسے فاسفورس اور کیلشیم جبکہ وٹامنز اے اور سی شامل ہوتے ہیں۔ درمیانے سائز کے 128گرام جاپانی پھل میں 31گرام کاربوہائیڈریٹ موجود ہوتے ہیںجبکہ اس میں فیٹس نہ ہونے کے برابر ہوتے ہیں جس کی وجہ سے یہ پھل وزن کم کرنے کے خواہش مند افراد کیلئے مفید ہوتا ہے۔ اس پھل کے چھلکے میں قدرتی طور پر بڑھتی ہوئی عمر کے اثرات سے بچانے کی صلاحیت ہوتی ہے کیونکہ اس کے چھلکے میں موجود فائٹو کیمیکل جلد پر ہونے والےبڑھتی عمر کے اثرات سے بچاتا ہے۔اس میں موجود فائبر ہاضمہ بہتر بناتے ہیں ۔ اپنی قبض کشا خصوصیات کی وجہ سے یہ لوگوں کے لیے بہترین ہے جو قبض میں مبتلا رہتے ہیں یا جگر کے مسائل کا شکار ہیں ۔پیشاب آور ہونے کی وجہ سے یہ پانی کی شکایت دور کرتا ہے اور پیشاب کی مقدار کو بڑھاتا ہے اس میں پوٹاشیم کی موجودگی پیشاب کے ذریعے اہم معدنیات کو ضائع نہیں ہونے دیتی۔ پرسیمن میں موجود شکر اور فرکٹوس کی وافر مقدار جسم کو توانائی فراہم کر کے ذہنی دباؤ اور سستی کے اثرات کو ختم کرتی ہے ۔ کھیل کود یا جسمانی سرگرمیوں میں حصہ لینے والے لوگوں اور بچوں کے لیے بہترین ہے۔اس پھل کو مردانہ قوت کیلئے بھی بہترین سمجھا جاتا ہے اور مرد حضرات اسے بڑے شوق کے ساتھ کھاتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں